پاک ماس میں مسیح کا خُون کیوں نہیں دیا جاتا؟

اِس پوسٹ کو دوسروں کے ساتھ شیئر کریں۔

لوگ پوچھتے ہیں کہ پاک ماس میں فادر صاحب پاک شراکت میں  صرف مسیح کا بدن دیتے ہیں۔مسیح کا خُون کیوں نہیں دیتے۔ جبکہ خُون وہ  خوداکیلے ہی پی جاتےہیں؟اِس سوال کا جواب دینے سے پہلے میَں ایک سچا واقعہ بتاناچاہتا ہوں۔ یہ اُن دِنوں کا واقعہ ہے َ جب میں فورڈیم یونیورسٹی نیویارک میں زیرِ تعلیم تھا۔ اتوار کا دِن تھا۔ میَں اَور میرا ایک  چینی کلاس فیلو پیٹرک پاک ماس کے لئے یونیورسٹی چیپل (چھوٹا گرجا) گئے۔ چونکہ سٹوڈنٹ کم تھے۔ فادر نے پاک شراکت کے ساتھ پاک پیالے میں شراکت کا موقعہ  بھی دیا۔ جب ہم پاک شراکت لینے کے لئے قطار میں کھڑے تھے۔ تو اچانک میرا ساتھی  پیٹرک قطار سے باہر نکل کر واپس اپنی نشست پرجا بیٹھا۔ میرا خیال تھا کہ شاید اُس کی طبعیت نا ساز ہوگئی ہو۔

پاک ماس کے بعد گھر جاتے ہوئے میَں نے راستے میں پیٹرک سے پوچھا کہ” پیٹر ک کیا ہُؤا تھا۔ آپ پاک شراکت کی قطار سے باہر آکر اپنی نشست پر جا بیٹھے؟” جس طرح آج کل کورونا وائر س پھیلا ہُؤا ہےَ۔ اُن دِنوں امریکی میں ایڈز کی افواہ پھیلی ہوئی تھی۔ اُس نے پاک پیالے میں شراکت پر اعتراض کرتے ہوئے کہا۔ “کیا ایک پیالے میں سے پی کر ہم نے ایڈز کروانی ہےَ”۔ خیر میَں نے اُس کہا کہ جس کا خُون ہم لینے کو تھے۔ کیا وہ ہمیں اِن بیماریوں سے شفاء دینے کی قُدرت نہیں رکھتا؟ اِس پر پیٹرک نے اپنے اِیمان پر غور کیا اَور وعدہ کیا کہ آئندہ وہ ایسا نہیں سوچے گا۔ اِس کے بعد ہم مسلسل پاک ماس میں جاتے اَور دونوں صورتوں یعنی روٹی اَور پاک پیالے کی صورت میں پاک شراکت لیتے رہے۔ اَب ایک طرف لوگ ایک پیالے میں سے پینے پر اعتراض کرنے والے ہیں۔ تو دوسری طرف پاک پیالے میں شراکت نہ ہونے پر اعتراض کرنے والے ہیں۔ البتہ پاک ماں کلیسیا موقعہ محل کو دیکھتے ہوئے ایک صورت یا دونوں صورتوں میں پاک شراکت دینے کا فیصلہ کرتی ہےَ۔

جب پاک ماس کی قربانی میں شریک افراد کی تعداد کم ہوتی ہےَ۔ وہاں اقدس پیالہ پینے کو دیا جاتا ہے۔ جب پاک ماس میں اِیمانداروں کی تعداد زیادہ ہو۔ تووہاں حفظانِ صحت کے اَصولوں کو مدِ نظر رکھتے ہوئے۔  صرف اقدس روٹی کی صورت میں پاک شراکت  دی جاتی ہےَ۔  بعض دفعہ پاک پیالے میں ہوستیہ ڈبو کر بھی پاک پیالے میں شراکت کی جاتی ہےَ۔ پاک پیالے میں ہر وقت شراکت ضروری نہیں۔ آئیں اِس حقیقت کو جاننے کی کوشش کرتےہیں۔  

رسولوں کے اعمال میں”یوخرست” کو ” روٹی توڑنا” کہا گیا ہےَ۔غور کریں کہ وہ “روٹی توڑنے اَور دُعا کرنے میں قائم رہے” ( رسولوں کے اعمال 2: 42)۔  وہ “گھر گھر روٹی توڑا کرتے تھے۔ اَور خوشی اَور دِل کی صفائی سے کھانا کھایا کرتے تھے” ( رسولوں کے اعمال 2: 46)۔ پھر ہم پڑھتے ہیں کہ “اَور ہفتہ کے پہلے دِن جب ہم روٹی توڑنے کے لئے جمع ہوئے۔ تو پولوؔس نے جو دوسرے دِن جانے والا تھا۔ اُن کے ساتھ کلام کیا اَور آدھی رات تک کلام کر تا رہا” ( رسولوں کے اعمال 20: 7)۔ کلام کے اِن تینوں حوالوں سے پتہ چلتا ہےَ کہ “روٹی توڑنے” کی شراکت کا ذکر ہےَ “مے” کی شراکت کا ذکر نہیں ہےَ۔

مقدس پولوؔس رسول لکھتے ہیں کہ “اِس واسطے جو کوئی نالائق طور پر یہ روٹی کھائے یا خُداوند کے پیالے میں سے پئیے۔ تو وہ خُداوند کے بدن اَور خُون کا گنہگار ٹھہرے گا” ( 1۔ قرنتیوں 11: 27)۔ اِس حوالے میں مقدس پولوؔس واضح طور دونوں اجزاء یعنی “روٹی کھائے یا پیالے میں سے پئیے” کا ذکر کرتے ہیں۔ اِن دونوں اجزاء میں سے کسی ایک کی بات کی گئی ہے۔ بیک وقت دونوں کو ایک ساتھ لینے کی بات نہیں کی گئی۔ روٹی یا پیالہ ہر ایک میں پورے طور پر خُداوند کا بدن اَور خُون، اُس کی روح اَور الوہیت دونوں حقیقی  طور پر موجود ہوتے ہیں۔  بدن کو خُون سے جُدا نہیں کیا جاسکتا۔ جہاں بدن ہوتا ہےَ وہاں خُون بھی ہوتا ہےَ۔

خُداوند یسوؔع مسیح نے فرمایا “زِندگی کی روٹی میَں ہی ہُوں” ( مقدس یوحنا 6: 48)۔ اُس نے قطعاً یہ نہیں کہا کہ “زِندگی کی روٹی اَور مے میَں ہی ہُوں”۔ اَور بائیبل مقدس میں کہیں کوئی ایسا حوالہ نہیں جس میں خُداوند یسوؔع مسیح نے کہا ہو کہ “زِندگی کی مے میَں ہی ہُوں”۔

اقدس یوخرست صرف روٹی کی صورت دی جاتی ہےَ۔ کیونکہ مسیح کا خُون اُس کے بدن سے جُدا نہیں ہوسکتا۔ اِس لئے خُداوند یسوؔع مسیح اقدس پیالے کا ذکر نہیں کرتے۔ مگر ہر ایک جو اقدس روٹی کھائے گا۔ اُس سے خُداوند ہمیشہ کی زندگی کا وعدہ کرتے ہوئے فرماتے ہیں کہ “میَں وہ زندہ روٹی ہُوں جو آسمان سے اُتری ہےَ۔ اگر کوئی اِس روٹی میں سے کھائے تو ہمیشہ تک زندہ رہے گا۔ اَور جو روٹی جہان کی زندگی کے لئے میَں دُوں گا۔ وہ میرا گوشت (بدن) ہے” ( مقدس یوحنا 6: 51-52)۔ اِس لئے یاد رکھیں کہ اقدس یوخرست کی صورت میں ہم پاک شراکت کی صورت میں جو مسیح کا بدن لیتے ہیں۔ اُس بدن میں خُون بھی شامل ہوتا ہےَ۔ کوئی بدن خُون کے بغیر نہیں ہوتا۔ اِس لئے کاتھولک اِیمان کے مخالفین کی چالوں سے ہوشیار رہنے کی ضرورت ہےَ۔ وہ بہت سے اِیمانداروں کےذہنوں میں اِس طرح کے سوالات ڈال کر اُن کو گمراہی کے راستے پر ڈال دیتے ہیں۔اِس لئے پاک شراکت لیتے وقت اِیمان ہونا ضروری ہےَ۔

Read Previous

کیا دِہ یکی دینا مسیحیوں پر فرض ہےَ؟

Read Next

سمجھدار گدھا

error: Content is protected !!